تحقیق وتنقید

حیات اللہ انصاری اور ان کے  چند افسانے←

پروفیسر علی احمد فاطمی، شعبۂ اردو یونی ورسٹی آف الہ آباد،  الہ آباد

پروفیسر علی احمد فاطمی شعبۂ اردو یونی ورسٹی آف الہ آباد،  الہ آباد عابد سہیل نے  حیات اللہ انصاری کا خاکہ لکھتے  ہوئے  ایک جگہ لکھا : ’’گاندھیائی فکر و نظر اورنقطۂ نظر سے  ان کے  شغف

پروفیسر احتشام حسین کی تنقید نگاری: ایک جائزہ←

پروفیسر سید شفیق احمد اشرفی، خواجہ معین الدین چشتی اردو عربی فارسی یونی ورسٹی، لکھنؤ

پروفیسر سید شفیق احمد اشرفی خواجہ معین الدین چشتی اردو عربی فارسی یونی ورسٹی، لکھنؤ حالی کے  مقدمہ شعر و شاعری کے  شائع ہونے  سے  اردو ادب پہلی بار تنقید کے  فن سے  روشناس ہو ا اور

جوشؔ کی باغیانہ شاعری←

پروفیسر فہمیدہ منصوری، صدر شعبۂ اُردو ،ماتا جیجا بائی گورنمنٹ گرلز پی جی کالج موتی طویلہ اندور (ایم۔پی) انڈیا

پروفیسر فہمیدہ منصوری صدر شعبۂ اُردو ،ماتا جیجا بائی گورنمنٹ گرلز پی جی کالج موتی طویلہ اندور (ایم۔پی) انڈیا جوشؔ  ( ۵دسمبر ۱۹۹۸ ؁ء،  ۲۲ فروری ۱۹۸۱ء؁)کا نام پہلے  غلام شبیر اور بعد میں  شبیر حسن خاں

اخترالایمان کی نظم گوئی←

ڈاکٹر شمیم احمد،اسسٹنٹ پروفیسر، سینٹ اسٹیفنز کالج،دہلی یونی ورسٹی، دہلی

ڈاکٹر شمیم احمد سینٹ اسٹیفنز کالج،  نئی دہلی اخترالایمان کی شاعری قدامت سے  جدت،  پابندی سے  آزادی اور وسعت سے  بے  کرانی کی طرف سفر ہے۔ ان کی نظموں  میں  نئی زندگی اور نئے  ماحول کی ترجمانی

حب الوطنی کا ترجمان کنول ڈبائیوی←

ڈاکٹرمحمد فاروق خان، ایم ایس انٹر کالج، سکندر آباد، بلند شہر۔

ڈاکٹرمحمد فاروق خان کنول ڈبائیوی پ ۱۹۲۰؁ء۔ م۱۹۹۴؁ءاپنے  ننھال قصبہ بہجوئی ضلع مراد آبادمیں  پیدا ہوئے۔  ان کے  والد قصبہ ڈبائی ضلع بلند شہر کے  مشہور وکیل اورزمین دار تھے۔  کنول دس سال کے  تھے  کہ باپ

مشاہیرخطوط کے  حوالے  سے” ایک مطالعہ”←

ڈاکٹر آصف حمید، شعبہ اُردو، گورنمنٹ کالج چکسواری، میرپور، کشمیر

ڈاکٹر آصف حمید شعبہ اُردو، گورنمنٹ کالج چکسواری، میرپور  کشمیر فون نمبر:0333-5833517 ای میل: drasifhamid1@gmail.com Abstract Since a great time letter have been a source of conveying messages, emotions and rationals. At present age this idea has

لسانیات۔۔۔تعارف اوراہمیت←

ڈاکٹر رابعہ سرفراز، ایسوسی ایٹ پروفیسرشعبہ اردو گورنمنٹ کالج یونی ورسٹی فیصل آباد

ڈاکٹر رابعہ سرفراز ایسوسی ایٹ پروفیسرشعبہ اردو گورنمنٹ کالج یونی ورسٹی فیصل آباد لسانیات اس علم کو کہتے  ہیں جس کے  ذریعے  زبان کی ماہیت ‘تشکیل‘ارتقا‘زندگی اور موت کے  متعلق آگاہی حاصل ہوتی ہے۔زبان کے  بارے  میں

اردو تحقیق و تدوین کی روایت :امتیاز علی خان عرشی اور قاضی عبد الودودکی خدمات کی روشنی میں   ←

ڈاکٹر الطاف حسین نقشبندی،   اسسٹینٹ پروفیسر,شعبۂ ارود، سینٹرل یونی ورسٹی کشمیر

ڈاکٹر الطاف حسین نقشبندی   اسسٹینٹ پروفیسر,شعبۂ ارود، سینٹرل یونی ورسٹی کشمیر قدیم مخطوطات کی بازیافت جن کی علمی، ادبی  اور تاریخی اہمیت ہو انھیں منشائے  مصنف کے  مطابق ترتیب دینا تدوین کہلاتا ہے۔منشائے  مصنف کے  مطابق

اٹھارہ سو ستاون اور مفتی صدرالدین خاں  آزؔردہ←

ڈاکٹر محمد ارشد، شعبہ ٔ اردو، دیال سنگھ کالج،  لودھی روڈ، دہلی یونیورسٹی

ڈاکٹر محمد ارشد شعبہ ٔ اردو، دیال سنگھ کا لج،  لو دھی روڈ، دہلی یو نیورسٹی برطانوی اقتدار کے  خلاف رئیس المجاہدین حضرت سید احمد شہید اور ان کے  تمام رفقاء کا ر نے  اسلامی جہاد کا

اردو کے اولین ناولوں میں تعلیمی اوراصلاحی میلانات -خواتین ناول نگاروں کے  حوالے  سے←

ڈاکٹر شاداب تبسّم، پی۔ڈی۔ایف۔جامعہ ملیہ اسلامیہ، نیٔ دہلی

ڈاکٹر شاداب تبسّم پی۔ڈی۔ایف۔جامعہ ملیہ اسلامیہ، نیٔ دہلی ڈپٹی نذیر احمد اردو کے  پہلے  ناول نگار تسلیم کیے  جاتے  ہیں ۔  انھوں نے  معاشرے  کی اصلاح کے  لیے  کیٔ ناول لکھے۔ اصلاح پسندانہ رجحان کے  باوجود ان

اردو شاعری میں آثار قدیمہ کی روایت←

ارسہ کوکب، ریسرچ اسکالر، انٹر نیشنل اسلامک یونی ورسٹی، اسلام آباد

ارسہ کوکب ریسرچ اسکالر، انٹر نیشنل اسلامک یونی ورسٹی، اسلام آباد 009232*****9 irsakokab@yahoo.com Abstract In this content, a concise review of past/archaeology has been mentioned. Our past is related to our present. The history of archaeology gives us

آزادی کے  بعد ہندوستان میں اردو نظم:ایک جائزہ←

عبدالحلیم انصاری (محمد حلیم)،   گیسٹ لیکچرار،  شعبہء اردو، رانی گنج گرلس کالج، شعبہء اردو، یونی ورسٹی آف بردوان (مغربی بنگال)

عبدالحلیم انصاری (محمد حلیم)   گیسٹ لیکچرار،  شعبہء اردو، رانی گنج گرلس کالج،  یونی ورسٹی آف بردوان، (مغربی بنگال) Mob-9093949554 ہندوستان کی آزادی کے  ساتھ ساتھ تقسیم ہند کا سانحہ بھی ہوا اور اس کے  ساتھ فرقہ ورانہ فسادات کا

کفن” کی بازگشت:آخری کوشش”←

عشرت رسول، ریسرچ اسکالر، سینٹرل یونی ورسٹی آف حیدر آباد

عشرت رسول ریسرچ اسکالر، سینٹرل یونی ورسٹی آف حیدر آباد  ای میل  ishurdu5u@gmail.com   فون نمبر  7006929771 حیات اللہ انصاری کو ترقی پسند ی کا نہ صرف معمار نقوش تصور کیا جاتا ہے  بلکہ بعض دفعہ انہیں

(اکیسویں صدی میں جموں وکشمیرکے  چند نمائندہ شاعرات (نسائی حسیت کے  تناظر میں←

سمیرا بانو ریسرچ اسکالر مولانا آزاد نیشنل اُردو یونی ورسٹی  حیدر آباد۔ سیٹالیٹ کیمپس ( سری نگر)

سمیرا بانو ریسرچ اسکالر مولانا آزاد نیشنل اُردو یونی ورسٹی  حیدر آباد۔ سیٹالیٹ کیمپس ( سری نگر) ای۔میل  gulsameera.rs@manuu.edu.in     ہندوستاں کے  باقی خطوں کے  ساتھ ساتھ ریاست جموں  کشمیر میں بھی خواتین نے  ادب میں مردوں

نئی غزل اورعصری مسائل←

سلیم انور،   ریسرچ اسکالر، شعبۂ اردو،  الہ آباد یونی ورسٹی، الہ آباد

سلیم انور   ریسرچ اسکالر شعبۂ اردو،  الہ آباد یونی ورسٹی، الہ آباد۔211002 موبائل: 9889533245 نئی غزل کیا ہے  اس کی ابتدا کب ہوئی؟ اس سلسلے  میں معروضی انداز میں یہ کہنا ذرا دشوار ہوجاتا ہے  کہ نئی

پریم  چند  کے افسانوں  میں  نسائی  مسائل←

بی سکینہ رسملائی، ریسرچ اسکالر مہاتما گاندھی انسٹی ٹیوٹ،  موریشش

بی سکینہ رسملائی ریسرچ اسکالر مہاتما گاندھی انسٹی ٹیوٹ،  موریشش This essay entitled ” the plight of women ”  in the stories of Prem Chand  explores the issues of the author’s female characters.Prem Chand  generally known as

نالۂ مہجوراور حریم محبت”کا شاعر شاہ مقبول احمد”←

شاداب عالم, ریسرچ اسکالر، ہندوستانی زبانوں کا مرکز، جواہر لعل نہرو یونی ورسٹی، دہلی

شاداب عالم ریسرچ اسکالر، ہندوستانی زبانوں کا مرکز، جواہر لعل نہرو یونی ورسٹی، دہلی زندگی کا ساز بھی کیا عجب ساز ہے  جب تک یہ بجتا ہے  اپنی دلکشی سے  ایک عالم کو مسحور کردیتا ہے۔ لیکن

سر سیداحمد خاں اردو، ادب میں جدیدیت کا نقشِ اوّل←

ارم صبا،   وفاقی اردو یونی ورسٹی برائے  فنون سائنس اور ٹیکنالوجی، اسلام آباد،  پاکستان

ارم صبا   وفاقی اردو یونی ورسٹی برائے  فنون سائنس اور ٹیکنالوجی اسلام آباد،  پاکستان سر سید احمد خاں مصلح قوم اور اردو ادب کے  عظیم محسن ہیں۔ سر سید کی سیاسی، سماجی اورمذہبی، تہذیبی اور تعلیمی کوششوں

ادب اطفال،  روایت اور مسائل←

شاہد اقبال، ریسرچ اسکالر،  شعبہ اردو جامعہ ملیہ اسلامیہ،  نئی دہلی

ادب اطفال سے  مراد ایک ایسا ادب ہے  جو بچوں کی ذہنی اور جسمانی صلاحیتوں کو پیش نظر رکھ کر تحریر کیا جائے۔ یعنی وہ ادب جو بچوں کی ذہنی و جسمانی تعلیم و تربیت اور صلاحیتوں

اردو میں ادبی تحقیق کی روایت۔نمائندہ محقیقین کے  حوالے  سے←

زاہد ظفر ،  ریسرچ اسکالر، شعبۂ اردو، کشمیر یونی ورسٹی، سرینگر

لفظ “تحقیق” عربی زبان کا  مصدر ہے  جس کا مادہ ‘حقّق، یُحَقّقُ،  تَحقیقاً سے  ماخوذ ہے  جو باطل کی ضد ہے۔حق کا مطلب ْثابت کرنا،  ثبوت فراہم کرناہے۔ تحقیق کا کام حال کو بہتر بنانا،  مستقبل کو

علی سردار جعفری کے افسانے←

پروفیسر ابن کنول، صدر شعبہ اردو، دہلی یونی ورسٹی، دہلی۔ انڈیا۔

شمالی ہندوستان میں اردو زبان و ادب کے لیے گزشتہ تین صدیاں بہت اہمیت رکھتی ہیں۔ اٹھارہویں صدی میں مغلیہ سلطنت کی بنیادیں ہلنے لگی تھیں، لیکن اردو شاعری کے زرّیں دور کا آغاز ہوگیا تھا۔ انیسویں

اندر سبھا کا یہود-اردومخطوطہ←

پروفیسر ارشد مسعود ہاشمی، صدر شعبۂ اردو، جئے پرکاش یو نی ورسٹی، چھپرہ

          یہود- اردو :         31 جولائی 2007 ء کو ڈاکٹر نور سو برس خان نے برٹش لائبریری کی ویب سائٹ پہ اس کے مخطوطہ نمبر Or. 13287 کے حوالے سے ایک نوٹ پیش کیا تھا۔ اس

اردو زبان کے ارتقا میں سرکاری اداروں کا کردار:ایک جائزہ←

مدنی اشرف، ریسرچ اسکالر، شعبہ اردو، دہلی یونیورسٹی

        برٹش حکومت کے شروعاتی دورمیں سرکاری زبان کا درجہ فارسی زبان کو حاصل تھا۔کیوں کہ انگریزوں نے ہندوستانی سلطنت مغلیہ حکومت سے چھینی تھی اور مغلوں کی زبان چونکہ فارسی تھی اس لیے حکومتی کام کاج

ممتاز مفتی کا جہانِ ادب←

بلال احمد تانترے، شعبۂ اردو، جامعہ ملیہ اسلامیہ ،دہلی

ممتازمفتی(۱۹۰۵۔۱۹۹۵)اردوادب کاایک معتبرنام ہے۔ انھیںاردوادب کی تاریخ میںمتعددوجوہ کی بنا پرایک امتیازی حیثیت حاصل ہے۔انھوں نے اردو ادب کو نہ صرف موضوعات کی سطح پر نئے امکانات سے روشناس کیا بلکہ اپنی فکرو نظرکی گہرائی اور تخیّل

آپ بیتیوں میں مافوق الفطرت عناصروعوامل     (ایک مطالعہ←

ڈاکٹرمسر ت بانو، اسسٹنٹ پروفیسر ،گورنمنٹ کالج برائے خواتین ،شاہ پور ضلع سرگودہا(پاکستان

Abstract: Supernatural are events or things that have been claimed to exist but can’t be explained by the laws of nature or science.It include things characteristic of or relating to ghosts, gods, witches or other types of

ساحرؔ لدھیانوی کی نظم نگاری←

 ڈاکٹر رحمت اللہ میر، اردولیکچرر،گورنمنٹ ڈگری کالج برائے خواتین بارہمولہ، جموں و کشمیر

ہر بڑاتخلیق کار اپنی شاعری میں حیات و کائنات کی حقیقتوںاور سچائیوں کا اظہار کر کے اپنی شاعری کو زیادہ سے زیادہ خوبصورت اور معنی خیز بنانے کی کوشش کرتا ہے لیکن دائمی کامیابی و کامرانی اسی

  دیباچے سے فلیپ تک : تحقیقی  و تنقیدی مطالعہ←

  احمد حسین،   ریسرچ سکالر(اردو)، وفاقی اردو یونی ورسٹی ،اسلام آباد۔ پاکستان

(From preface to flap) Prof.saifullah Khalid’s book;From preface to flap, is in a way startling writing to the literary circles.this book is a whip for those poets and writers who literarily dishonest, and it is performing the

ناوکؔ حمزہ پوری کی رباعیات کا تنقیدی مطالعہ←

ڈاکٹر مقبول احمد مقبولؔ ایسو سی ایٹ پروفیسر شعبۂ اردو مہاراشٹرا اودے گری کالج اودگیر۔413517 ضلع لاتور (مہاراشٹرا) 0928598414/07788443243

حمزہ پور،بہار کے ضلع گیا کا ایک چھوٹا قصبہ ہے۔یہی قصبہ سیدغلام السیدین ناوکؔ حمزہ پوری کا مولد ومسکن ہے۔ان کی تاریخِ ولادت ۲۱ اپریل ۱۹۳۳ ء ہے۔ناوک حمزہ پوری عصرِ حاضر کے بزرگ شاعر وادیب ہیں

نعت، نعت گوئی کی روایت اور نعت گو شعرا←

سعود عالم، مین مارکیٹ اوکھلا، جامعہ نگر نئی دہلی

     نعتِ رسول دراصل اصناف سخن کی وہ نازک صنف ہے جس میں طبع آزمائی کرتے وقت اقلیم سخن کے تاجدار حضرت مولانا جامیؔ نے فرمایا ہے: لا یُمکن الثناء کما کان حقّہٗ بعد از خدا بزرگ

موجودہ طرز معاشرت اور ترجمہ←

ڈاکٹر ابو شہیم خان شعبہء اردو و فارسی ،ڈاکٹر ہری سنگھ گور سنٹرل یو نیور سٹی ساگر 470003 مدھیہ پردیش

ڈاکٹر ابو شہیم خان شعبہء اردو و فارسی ،ڈاکٹر ہری سنگھ گور سنٹرل یو نیور سٹی ساگر 470003 مدھیہ پردیش shaheemjnu@gmail.com Mob;07354966719                    شخصی اور عمومی اظہار اور ان

  لداخ کا سماجی و ثقافتی مطالعہ راشید راہگیر لداخی اور عبدلاغنی شیخ کے افسانوی مجموعہ    ’ اندھیرا سویرا ‘او’ر ایک ملک دو کہانی ‘کے حوالے سے←

عیسیٰ محمد کارگل لداخ ریسرچ اسکالر، شعبہ اردو، حیدر آباد یونیورسٹی

 لداخ ریاست جموں و کشمیر کا تیسرا خطہ ہے۔یہاں کے ننگے پہاڑوں اور بنجر میدانوں میں اپنی دلکشی اور جاذبیت ہے،یہاں ہر طرف اونچے پہاڑ اور لمبے چوڑے میداں نظر آتے ہیں ۔ لداخ میں میلوں تک

کلام نظیر کے انگر یزی تراجم←

ڈاکٹر ابو شہیم خان ڈاکٹر ہری سنگھ گور سنٹرل یو نیور سٹی ساگر مدھیہ پردیش

 ڈاکٹر ابو شہیم خان شعبہء اردو و فارسی ،ڈاکٹر ہری سنگھ گور سنٹرل یو نیور سٹی ساگر 470003 مدھیہ پردیش                 shaheemjnu@gmail.com Mob;07354966719#  انیسو یں صدی کے اواخر اور بیسویں

محقق قاضی عبدالودود←

ڈاکٹرعرشی خاتون

اردو میں  باضابطہ طور پر تحقیق کا آغاز محمود شیرانی سے ہوتا ہے۔ انھیں  تحقیق کا معلّم اوّل کہا جاتا ہے۔ شیرانی صاحب نے پہلی بار تحقیق میں  غیر جذباتی اندازِ نظر کی ضرورت کا احساس دلایا۔

اردوغزل کا تحقیقی  جائزہ←

جاں نثار معین، مولانا آزاد یونی ورسٹی، حیدراباد، انڈیا

تلخیص: غزل اُردو ۔ فارسی یا عربی کی ایک صنفِ سُخن ہے۔جس کے پہلے دو مِصرے ہم قافیہ ہوتے ہیں ۔ غزل کے لیے پہلے ریختہ لفظ  استعمال میں  تھا۔( امیر خسروؒ نے موسیقی کی راگ کو

اردوکالم نویسی میں قاسمی کا اختصاص←

حامد رضا صدیقی مسلم یونی ورسٹی علی گڑھ Mob. 07895674316 E-mail:hamidrazaamu@gmail.com

                احمد ندیم قاسمی دنیا ئے ادب میں تعارف کے محتاج نہیں ہیں انھوں نے اردو ادب میں مختلف اصناف میں طبع آزمائی کی اور انھوں نے ناول، افسانے،ڈرامے، صحافت، تنقید، اور کالم نگاری میں اہم کارنا

ساحر لدھیانوی کی شاعری’’تلخیاں ‘‘ کی روشنی میں←

پشپیندر کمار نم ریسرچ اسکالر، شعبہ اردو دہلی یونی ورسٹی، دہلی

  ساحر لدھیانوی کا اصلی نام عبد الحئی ہے۔وہ ۸؍ مارچ ۱۹۲۱ء کو لدھیانہ میں  پیدا ہوئے۔ اسی لیے لدھیانوی کہلائے۔ جب کہ ساحرؔ ان کا تخلص ہے۔ سا حر لدھیا نوی ایک بڑے متمول گھرا نے

کاشف الحقائق اور شیخ امام بخش ناسخ←

محمد مقیم ریسرچ اسکالر جامعہ ملیہ اسلامیہ نئی دہلی

’کاشف الحقائق‘ امداد امام اثر کی مشہور زمانہ کتاب ہے۔ اس کی قاموسی حیثیت آج بھی مسلم ہے۔سچ تو یہ ہے کہ اردو ادب کی تاریخ میں  اثر کا نام اسی کتاب کی بدولت ہے۔ اس مضمون

اردومیں بچوں کاسائنسی ادب ایک مطالعہ←

محمدرضافراز، ریسرچ اسکالر،شعبہ اردو دہلی یونیورسٹی،دہلی

ہرزمانہ کی سائنس اور ٹکنالوجی اس دور کے تقاضوں اور ضرورتوں کے اعتبار سے مختلف ہوتی ہیں ،ان ٹکنالوجی کو سمجھ کر ان کی برکتوں سے لطف اندوز ہونا اور اس کو استعمال میں لاناایک ترقی یافتہ

تانیثیت اور مئیوٹ گروپ تھیوری←

عبدالقادر صدیقی

دنیا جسے عورت کے نام سے جانتی ہے، صدیوں سے ٹھگی گئی ہے ۔ آج گر اسے کچھ آزادی حاصل بھی ہے تو اتنی ہی جتنی کہ سرمایہ داروں اور پدرسری نظام کے فائدے کے لیے ضروری

سرسیّد اور صحافت←

ڈاکٹر صدیقہ جابر حمیدیہ گرلز پی جی کالج الٰہ آباد یونی ورسٹی ، الٰہ آباد

              17اکتوبر 1817ء، یہ وہ تاریخ اور سال ہے جس میں ہندوستانی مسلمانوں کی سسکتی زندگی کو علم و عرفان کا آبِ حیات پلانے والے سرسیّد احمد خاں کا وجودِ مسعود

اخترالایمان کی شاعری کا فکری پس منظر←

ڈاکٹر شاہ عالم ، شعبہ اردو ذاکر حسین دہلی کالج

بیسویں صدی  کے نمائندہ شاعروں  میں اخترالایمان کو منفرد مقام حاصل ہے۔ روشِ عام سے ہٹ کر انھوں نے جس طرز کی شاعری کو رواج دیا اس سے ہمارے اجتماعی مذاق کو مانوس ہونے میں دیر لگی۔

تر جمہ : ایک تہذ یبی و لسانی مفا ہمہ
ڈاکٹر ابو شہیم خان←

ابو شہیم خان

   ڈاکٹر ابو شہیم خان*  تمام علمی و ادبی کار ناموں کی طرح ترجمے کا بھی راست تعلق ترسیل اور ابلاغ سے ہے  ۔ ترسیل اور ابلاغ کو موثر ،بلیغ اور مفرح بنانا اور بنائے رکھنا ہمیشہ

”منور خاں غافل، اوراقِ گم گشتہ”

ڈاکٹر زاہرہ نثار سینیئر مدیر / اسسٹنٹ پروفیسر شعبۂ اردو دائرہ معارفِ اسلامیہ علامہ اقبال کیمپس، جامعہ پنجاب لاہور، پاکستان

ڈاکٹر زاہرہ نثار* منور خاں غافل ولد صلابت خاں صاحبِ دیوان شاعر تھا۔ لکھنؤ میں پیدا ہوا اور یہیں نشوونما پائی۔ اُسے زمانۂ طالب علمی سے ہی شعر موزوں کرنے کی صلاحیت ودیعت ہو چکی تھی۔ یہاں

اُردو اور پنجاب کا باہمی رشتہ       ←

محمد عرفان

محمد عرفان* پنجاب ہندوستان کے شمال مشرق میں واقع ہے۔ مختلف ادوار میں اس خطے کا نام تبدیل ہو کر اب ”پنجاب” نام سے جانا جاتا ہے جو کہ فارسی زبان کے دو لفظوں ”پنج” اور ”آب”

اردو میں اشاریہ سازی کی اہمیت     ←

غلام نبی کمار، رہسرچ اسکالر شعبہ اردو دہلی یونی ورسٹی، 7053562468

غلام نبی کمار* اشاریہ سازی ایک مستقل فن ہے ۔کتابیات کی طرح اشاریہ کی بھی بڑی اہمیت ہے۔ اشاریہ سازی کے فن کو عمو ماً رسائل و جرائد کے ساتھ منسلک کیا جاتا ہے ۔ لیکن اشاریہ

”دشت سوس”  ۔۔ فکشن اور تاریخ کا انوکھا امتزاج

ڈاکٹرفردوس احمد بٹ

ڈاکٹرفردوس احمد بٹ*             جمیلہ ہاشمی اردوادب کی ایک مایہ ناز فکشن نگار ہیں۔ افسانہ نویسی اور ناول نگاری کو انہوں نے اپنا خاص میدان بنایا او ر ان میں وہ کارہائے نمایاں انجام دیئے کہ انہیں

قمر جمالی بحیثیت ڈراما نگار:ایک جائزہ

محمد کامل، جامعہ ملیہ اسلامیہ

            اردو ادب میں قمر جمالی کی پہچان ایک افسانہ نگار کی حیثیت سے محتاج تعارف نہیں ہے۔ قمر جمالی کے افسانوں کے دو مجموعے ”شبیہ” ا ور ”سبوچہ” شائع ہوچکے ہیں۔ ان کے طرز تحریر میں

مشتاق احمد یوسفی کی ظرافت نگاری

حافظ سید عبدالکریم رضوان

بیسویں صدی کی ساتویں دہائی سے لے کر اکیسویں صدی کے موجودہ دورمیںاردو کے طنزیہ ومزاحیہ ادب میں جو مقبول نام گردش کر رہے ہیں ان میں ایک نام مشتاق احمد یوسفی کا بھی ہے۔ مشتاق احمد

اکیسویں صدی اور عصمت کی افسانہ نگاری کی معنویت←

شہناز یوسف

شہناز یوسف* عصمت چغتائی کا نام آتے ہی ذہن میں یہ سوال آتا ہے کہ ایساکیا رہ باقی رہ گیا جس پر قلم اٹھا کر عصمت کی تخلیق کے مانند ہی لوگوں کو چونکا دیا جائے۔ یہ

حالی سے قبل اردو تنقید کی روایت←

محمد ایاز خان

محمد ایاز خان٭ اردو کے بیشتر نقادوں اور اہل ِ نظر کا خیال ہے کہ اردو تنقید کاباقاعدہ آغاز حالی کے مقدمہ شعر و شاعری سے ہوا جو1893میں شائع ہوا۔یہ بات درست ہے مگر یہ بھی حقیقت

Please wait...

Subscribe to our newsletter

Want to be notified when our article is published? Enter your email address and name below to be the first to know.