اصناف پارینہ

“انیسویں  صدی کی مشترکہ تہذیب اور مثنوی “لخت جگر←

خان محمد رضوان، ریسرچ اسکالر، شعبۂ اردو، دپلی یونی ورسٹی، دہلی

مثنوی اصنافِ سخن میں  بہت مقبول اور کار آمد تسلیم کی جاتی ہے۔ اس کے  موضوعات، زبان اور طرِز بیان سب سے  جدا ہیں۔  اردوادب کی تاریخ کا مطالعہ کرنے  کے  بعد اندازہ ہوتا ہے  کہ ہر

حافظ ابراہیم کی شاعری میں مرثیہ گوئی←

محمد انوار الدین

محمد انوار الدین* مصر میں نپولین کے حملہ سے انقلاب کا ایک نیا باب کھلا جس نے زندگی کے ہر شعبہ کی کایا پلٹ کردی ۔عربی زبان وادب بھی نہضہ حدیثہ کے اس دور میں داخل ہوا

Please wait...

Subscribe to our newsletter

Want to be notified when our article is published? Enter your email address and name below to be the first to know.