Author Archive

حیات اللہ انصاری اور ان کے  چند افسانے←

پروفیسر علی احمد فاطمی شعبۂ اردو یونی ورسٹی آف الہ آباد،  الہ آباد

پروفیسر علی احمد فاطمی شعبۂ اردو یونی ورسٹی آف الہ آباد،  الہ آباد عابد سہیل نے  حیات اللہ انصاری کا خاکہ لکھتے  ہوئے  ایک جگہ لکھا : ’’گاندھیائی فکر و نظر اورنقطۂ نظر سے  ان کے  شغف

پروفیسر احتشام حسین کی تنقید نگاری: ایک جائزہ←

پروفیسر سید شفیق احمد اشرفی، خواجہ معین الدین چشتی اردو عربی فارسی یونی ورسٹی، لکھنؤ

پروفیسر سید شفیق احمد اشرفی خواجہ معین الدین چشتی اردو عربی فارسی یونی ورسٹی، لکھنؤ حالی کے  مقدمہ شعر و شاعری کے  شائع ہونے  سے  اردو ادب پہلی بار تنقید کے  فن سے  روشناس ہو ا اور

جوشؔ کی باغیانہ شاعری←

پروفیسر فہمیدہ منصوری، صدر شعبۂ اُردو ،ماتا جیجا بائی گورنمنٹ گرلز پی جی کالج موتی طویلہ اندور (ایم۔پی) انڈیا

پروفیسر فہمیدہ منصوری صدر شعبۂ اُردو ،ماتا جیجا بائی گورنمنٹ گرلز پی جی کالج موتی طویلہ اندور (ایم۔پی) انڈیا جوشؔ  ( ۵دسمبر ۱۹۹۸ ؁ء،  ۲۲ فروری ۱۹۸۱ء؁)کا نام پہلے  غلام شبیر اور بعد میں  شبیر حسن خاں

اخترالایمان کی نظم گوئی←

ڈاکٹر شمیم احمد،اسسٹنٹ پروفیسر، سینٹ اسٹیفنز کالج،دہلی یونی ورسٹی، دہلی

ڈاکٹر شمیم احمد سینٹ اسٹیفنز کالج،  نئی دہلی اخترالایمان کی شاعری قدامت سے  جدت،  پابندی سے  آزادی اور وسعت سے  بے  کرانی کی طرف سفر ہے۔ ان کی نظموں  میں  نئی زندگی اور نئے  ماحول کی ترجمانی

اختر مسلمی اوران کی وابستگیاں←

ڈاکٹر ابوشہیم خان، اسسٹنٹ پروفیسر،  شعبئہ اردو و فاسی ڈاکٹر ہری سنگھ گور سنٹرل یو نیو رسٹی،  ساگر، مددھیہ پردیش

ڈاکٹر ابوشہیم خان اسسٹنٹ پروفیسر،  شعبئہ اردو و فاسی ڈاکٹر ہری سنگھ گور سنٹرل یو نیو رسٹی،  ساگر، مددھیہ پردیش  470003،      shaheemjnu@gmail.com    [  ـ مختصرتعارف۔۔۔۔ عبیداللہ معروف بہ ـاختر مسلمی کا آ بائی وطن  پر وانچل

شیمہ رضوی اور ان کی کتاب اردو غزل اور اس کا فکری و فنی نظام←

ڈاکٹر محمداکمل، اسسٹنٹ پروفیسر،  شعبۂ اردو خواجہ معین الدین چشتی اردو،  عربی۔فارسی یونی ورسٹی،  لکھنؤ

ڈاکٹر محمداکمل اسسٹنٹ پروفیسر،  شعبۂ اردو خواجہ معین الدین چشتی اردو،  عربی۔فارسی یونی ورسٹی،  لکھنؤ غزل اردو شاعری کی وہ صنف سخن ہے  جو ہمیشہ مقبول اور ہر دل عزیزرہی۔ اردو غزل کے  فکر و فن کی

مشاہیرخطوط کے  حوالے  سے” ایک مطالعہ”←

ڈاکٹر آصف حمید، شعبہ اُردو، گورنمنٹ کالج چکسواری، میرپور، کشمیر

ڈاکٹر آصف حمید شعبہ اُردو، گورنمنٹ کالج چکسواری، میرپور  کشمیر فون نمبر:0333-5833517 ای میل: drasifhamid1@gmail.com Abstract Since a great time letter have been a source of conveying messages, emotions and rationals. At present age this idea has

رومانوی تحریک  اوراردو ناول←

ڈاکٹر سعید احمد، اسسٹنٹ پروفیسر، شعبہ اردو، عالیہ یونی ورسٹی، کلکتہ

ڈاکٹر سعید احمد اسسٹنٹ پروفیسر، شعبہ اردو، عالیہ یونی ورسٹی، کلکتہ انگریزی زبان میں رومانٹک یا رومانوی لفظ کا استعمال پہلے  پہل سترھویں صدی عیسوی میں ایچ مور نے  کیا اور یہ لفظ رومانوی قصوں (Romances) کے 

لسانیات۔۔۔تعارف اوراہمیت←

ڈاکٹر رابعہ سرفراز، ایسوسی ایٹ پروفیسرشعبہ اردو گورنمنٹ کالج یونی ورسٹی فیصل آباد

ڈاکٹر رابعہ سرفراز ایسوسی ایٹ پروفیسرشعبہ اردو گورنمنٹ کالج یونی ورسٹی فیصل آباد لسانیات اس علم کو کہتے  ہیں جس کے  ذریعے  زبان کی ماہیت ‘تشکیل‘ارتقا‘زندگی اور موت کے  متعلق آگاہی حاصل ہوتی ہے۔زبان کے  بارے  میں

لسانی تشکیلات کی تحریک اور پاکستانی اردو غزل←

ڈاکٹر جابر حسین، شعبہ اردو، اسلام آباد ماڈل کالج برائے  طلباء

ڈاکٹر جابر حسین شعبہ اردو، اسلام آباد ماڈل کالج برائے  طلباء،  F-10/4 Dr.Jabir Hussain, Dep of Urdu, Islamabad Model College for Boys ,F-10/4 The Movement  of “Lisaani Tashkeelaat” (Language Configration/Reformation) and Pakistani Urdu Ghazal The decade of

اردو تحقیق و تدوین کی روایت و اہمیت :امتیاز علی خان عرشی اور قاضی عبد الودودکی خدمات کی روشنی میں   ←

ڈاکٹر الطاف حسین نقشبندی،   اسسٹینٹ پروفیسر,شعبۂ ارود، سینٹرل یونی ورسٹی کشمیر

ڈاکٹر الطاف حسین نقشبندی   اسسٹینٹ پروفیسر,شعبۂ ارود، سینٹرل یونی ورسٹی کشمیر قدیم مخطوطات کی بازیافت جن کی علمی، ادبی  اور تاریخی اہمیت ہو انھیں منشائے  مصنف کے  مطابق ترتیب دینا تدوین کہلاتا ہے۔منشائے  مصنف کے  مطابق

مولانا ابوالکلام آزاد کے  اسلوب نثر کا تنوع←

ڈاکٹر محمد اسلم جامعی ، صدر شعبہ اردو، ماں شاردا پی۔ جی۔ کالج، بندکی فتحپور، کانپور منڈل

ڈاکٹر محمد اسلم جامعی                                         صدر شعبہ اردو، ماں شاردا پی۔ جی۔ کالج                                          بندکی فتحپور، کانپور منڈل مولانا ابوالکلام آزاد نے  ادبی اور دانشورانہ زندگی کا آغاز اپنی صحافیانہ سرگرمیوں سے  کیا تھا۔ اس صحافت میں

اٹھارہ سو ستاون اور مفتی صدرالدین خاں  آزؔردہ←

ڈاکٹر محمد ارشد، شعبہ ٔ اردو، دیال سنگھ کا لج،  لو دھی روڈ، دہلی یو نیورسٹی

ڈاکٹر محمد ارشد شعبہ ٔ اردو، دیال سنگھ کا لج،  لو دھی روڈ، دہلی یو نیورسٹی برطانوی اقتدار کے  خلاف رئیس المجاہدین حضرت سید احمد شہید اور ان کے  تمام رفقاء کا ر نے  اسلامی جہاد کا

(اردو کے اولین ناولوں میں تعلیمی اوراصلاحی میلانات (خواتین ناول نگاروں کے  حوالے  سے←

ڈاکٹر شاداب تبسّم، پی۔ڈی۔ایف۔جامعہ ملیہ اسلامیہ، نیٔ دہلی

ڈاکٹر شاداب تبسّم پی۔ڈی۔ایف۔جامعہ ملیہ اسلامیہ، نیٔ دہلی ڈپٹی نذیر احمد اردو کے  پہلے  ناول نگار تسلیم کیے  جاتے  ہیں ۔  انھوں نے  معاشرے  کی اصلاح کے  لیے  کیٔ ناول لکھے۔ اصلاح پسندانہ رجحان کے  باوجود ان

فکر اقبال کی عصری معنویت خواتین کے  حوالے  سے←

ڈاکٹر نصرت جبین، یونی ورسٹی آف کشمیر، انڈیا

ڈاکٹر نصرت جبین یونی ورسٹی آف کشمیر، انڈیا اقبال کا شمار اردو کے  اہم ترین شاعروں میں ہوتا ہے۔موضوع کے  اعتبار سے  وہ اردو کے  بیشتر شعراء سے  مختلف ہیں۔ خاص طور پر خواتین کے  حوالے  سے 

’تونے  اے  اقبال پائی،  عاشقِ شیدا کی موت‘←

ڈاکٹر اشرف گورکھپوری شعبہ اردو دہلی یونی ورسٹی، دہلی موبائل نمبر۔  9311827240  email ashrafalimehadvi@gmail.com پنڈت جواہر لال نہرو نے  کہا تھا کہ ’’ قوم اپنے  شاعروں اور فلسفیوں سے  پہچانی جاتی ہے  نہ کہ اربابِ سیاست سے۔

فہمیدہ ریاض :ایک لمحے  کا سفر ہے  زندگی←

پروفیسر غلام شبیررانا، مصطفی باد، پاکستان

غلام شبیررانا مصطفی باد، پاکستان۔  سلطانی ٔ جمہور، انسانی حقوق اور خواتین کے  حقوق کی علم بردار ترقی پسند ادیبہ فہمیدہ ریاض 21۔نومبر 2018 کی شب لاہور میں  خالق حقیقی سے  جا ملیں۔  وہ اپنی بیٹی سے 

آسٹریلیا میں اردو کی نگہت:ڈاکٹر نگہت نسیم←

مہوش نور، ریسرچ اسکالر،  جواہرلعل نہرویونی ورسٹی،  نئی دہلی

مہوش نور ریسرچ اسکالر،  جواہرلعل نہرویونی ورسٹی،  نئی دہلی Email: mahwashjnu10@gmail.com اردوادب کی تاریخ کا گلشن رنگ برنگے  اور خوبصورت پھولوں سے  مزین اورآراستہ و پیراستہ ہے۔اس گلشن کی باغبانی صدیوں سے  مخلص باغباں کرتے  چلے  آرہے

اردو شاعری میں آثار قدیمہ کی روایت←

ارسہ کوکب، ریسرچ اسکالر، انٹر نیشنل اسلامک یونی ورسٹی، اسلام آباد

ارسہ کوکب پی۔ ایچ ۔ ڈی اسکالر 009232*****9 irsakokab@yahoo.com انٹر نیشنل اسلامک یونی ورسٹی، اسلام آباد Abstract In this content, a concise review of past/archaeology has been mentioned. Our past is related to our present. The history

آزادی کے  بعد ہندوستان میں اردو نظم:ایک جائزہ←

عبدالحلیم انصاری (محمد حلیم)،   گیسٹ لیکچرار،  شعبہء اردو، رانی گنج گرلس کالج، شعبہء اردو، یونی ورسٹی آف بردوان (مغربی بنگال)

عبدالحلیم انصاری (محمد حلیم)   گیسٹ لیکچرار،  شعبہء اردو، رانی گنج گرلس کالج        شعبہء اردو، یونی ورسٹی آف بردوان (مغربی بنگال) Mob-9093949554 ہندوستان کی آزادی کے  ساتھ ساتھ تقسیم ہند کا سانحہ بھی ہوا اور اس

کفن” کی بازگشت:آخری کوشش”←

عشرت رسول، ریسرچ اسکالر، سینٹرل یونی ورسٹی آف حیدر آباد

عشرت رسول ریسرچ اسکالر، سینٹرل یونی ورسٹی آف حیدر آباد  ای میل  ishurdu5u@gmail.com   فون نمبر  7006929771 حیات اللہ انصاری کو ترقی پسند ی کا نہ صرف معمار نقوش تصور کیا جاتا ہے  بلکہ بعض دفعہ انہیں

جدیدیت کا رجحان اور تصوّف کی واپسی←

صابر شبیربڈگامی، ریسرچ اسکالرشعبۂ اُردو کشمیر یونی ورسٹی

صابر شبیربڈگامی ریسرچ اسکالرشعبۂ اُردو کشمیر یونی ورسٹی Email:darshabir36037@gmail.com فون نمبر:9596101499       ۱۹۶۰ کے  آس پاس ایک نیا ادبی رجحان سامنے  آیا جسے  جدیدیت سے  موسوم کیا گیا۔اس نئے  رجحان کا خمیر وجودیت سے  تیار ہوا تھا۔گویا

اٹھارہ سو ستاون اور اردو←

بشریٰ غفور ، ریسرچ اسکالر، شعبہ اردو،دہلی یونی ورسٹی دہلی۔۱۱۰۰۰۷

بشریٰ غفور ریسرچ اسکالر، شعبہ اردو،دہلی یونی ورسٹی دہلی۔۱۱۰۰۰۷   انسان کے  خیالات واحساسات اور جذبات کو دیگر افراد کے  سامنے  پیش کرنے  کا اہم ذریعہ زبان ہے۔ زبان کے  ذریعے  انسان جو کچھ سوچتا یا سمجھتا

(اکیسویں صدی میں جموں وکشمیرکے  چند نمائندہ شاعرات (نسائی حسیت کے  تناظر میں←

سمیرا بانو ریسرچ اسکالر مولانا آزاد نیشنل اُردو یونی ورسٹی  حیدر آباد۔ سیٹالیٹ کیمپس ( سری نگر)

سمیرا بانو ریسرچ اسکالر مولانا آزاد نیشنل اُردو یونی ورسٹی  حیدر آباد۔ سیٹالیٹ کیمپس ( سری نگر) ای۔میل  gulsameera.rs@manuu.edu.in     ہندوستاں کے  باقی خطوں کے  ساتھ ساتھ ریاست جموں  کشمیر میں بھی خواتین نے  ادب میں مردوں

نئی غزل اورعصری مسائل←

سلیم انور،   ریسرچ اسکالر، شعبۂ اردو،  الہ آباد یونی ورسٹی، الہ آباد

سلیم انور   ریسرچ اسکالر شعبۂ اردو،  الہ آباد یونی ورسٹی، الہ آباد۔211002 موبائل: 9889533245 نئی غزل کیا ہے  اس کی ابتدا کب ہوئی؟ اس سلسلے  میں معروضی انداز میں یہ کہنا ذرا دشوار ہوجاتا ہے  کہ نئی

پریم  چند  کے افسانوں  میں  نسائی  مسائل←

بی سکینہ رسملائی، ریسرچ اسکالر مہاتما گاندھی انسٹی ٹیوٹ،  موریشش

بی سکینہ رسملائی ریسرچ اسکالر مہاتما گاندھی انسٹی ٹیوٹ،  موریشش This essay entitled ” the plight of women ”  in the stories of Prem Chand  explores the issues of the author’s female characters.Prem Chand  generally known as

نالۂ مہجوراور حریم محبت”کا شاعر شاہ مقبول احمد”←

شاداب عالم, ریسرچ اسکالر، ہندوستانی زبانوں کا مرکز، جواہر لعل نہرو یونی ورسٹی، دہلی

شاداب عالم ریسرچ اسکالر، ہندوستانی زبانوں کا مرکز، جواہر لعل نہرو یونی ورسٹی، دہلی زندگی کا ساز بھی کیا عجب ساز ہے  جب تک یہ بجتا ہے  اپنی دلکشی سے  ایک عالم کو مسحور کردیتا ہے۔ لیکن

سر سیداحمد خاں اردو، ادب میں جدیدیت کا نقشِ اوّل←

ارم صبا،   وفاقی اردو یونی ورسٹی برائے  فنون سائنس اور ٹیکنالوجی، اسلام آباد،  پاکستان

ارم صبا   وفاقی اردو یونی ورسٹی برائے  فنون سائنس اور ٹیکنالوجی اسلام آباد،  پاکستان سر سید احمد خاں مصلح قوم اور اردو ادب کے  عظیم محسن ہیں۔ سر سید کی سیاسی، سماجی اورمذہبی، تہذیبی اور تعلیمی کوششوں

ادب اطفال،  روایت اور مسائل←

شاہد اقبال، ریسرچ اسکالر،  شعبہ اردو جامعہ ملیہ اسلامیہ،  نئی دہلی

ادب اطفال سے  مراد ایک ایسا ادب ہے  جو بچوں کی ذہنی اور جسمانی صلاحیتوں کو پیش نظر رکھ کر تحریر کیا جائے۔ یعنی وہ ادب جو بچوں کی ذہنی و جسمانی تعلیم و تربیت اور صلاحیتوں

اردو میں ادبی تحقیق کی روایت۔نمائندہ محقیقین کے  حوالے  سے←

زاہد ظفر ،  ریسرچ اسکالر، شعبۂ اردو، کشمیر یونی ورسٹی، سرینگر

لفظ “تحقیق” عربی زبان کا  مصدر ہے  جس کا مادہ ‘حقّق، یُحَقّقُ،  تَحقیقاً سے  ماخوذ ہے  جو باطل کی ضد ہے۔حق کا مطلب ْثابت کرنا،  ثبوت فراہم کرناہے۔ تحقیق کا کام حال کو بہتر بنانا،  مستقبل کو

“انیسویں  صدی کی مشترکہ تہذیب اور مثنوی “لخت جگر←

خان محمد رضوان، ریسرچ اسکالر، شعبۂ اردو، دپلی یونی ورسٹی، دہلی

مثنوی اصنافِ سخن میں  بہت مقبول اور کار آمد تسلیم کی جاتی ہے۔ اس کے  موضوعات، زبان اور طرِز بیان سب سے  جدا ہیں۔  اردوادب کی تاریخ کا مطالعہ کرنے  کے  بعد اندازہ ہوتا ہے  کہ ہر

کارپوریٹ گورننس کی عمل آوری اور تجربات←

ڈاکٹر سید خواجہ صفی الدین، اسسٹنٹ پروفیسر  شعبۂ انتظامی مطالعات مولانا آزاد نیشنل اُردو یونی ورسٹی۔

تلخیص Abstract : کارپوریٹ گورننس ایک ایسا نظام ہے  جس کے  ذریعہ کمپنیاں  چلائی جاتی ہیں  اور انہیں  کنٹرول کیا جاتا ہے۔  بورڈ آف ڈائرکٹرز اپنی کمپنیوں  کے  انتظامیہ (Governance ) کے  ذمہ دار ہوا کرتے  ہیں۔ 

ہندوستان میں خاتون سربراہ خاندان کا بڑھتا رحجان۔ ایک مطالعہ←

سیدہ سارہ سلطانہ ریسرچ اسکالر شعبہ تعلیم نسواں۔  شعبہ تعلیم نسواں،  مولانا آزاد نیشنل اردو یونی ورسٹی، حیدر آباد

تمہید :  خاندان سماج کی اہم اور بنیاد ی اکائی ہوتی ہے  جسکو ہر سماج میں بڑی اہمیت حاصل رہی ہے  ․مشترکہ خاندانی نظا م ہندوستانی سماج کی خصوصیات میں سے  ایک خصوصیت رہی ہے  بیسویں و

(تبصرہ: دلت کویتا جاگ اٹھی ہے  (شعری مجموعہ←

مبصر:۔         سنتوش کمار

نام کتاب:۔ دلت کویتا جاگ اٹھی ہے  (شعری مجموعہ) شاعر و ناشر:۔ ڈاکٹر حنیف ترین صفحات:       ۔ ۱۱۰ قیمت:۔        ؍۱۵۰ روپے سال اشاعت:۔ ۲۰۱۸ء مطبع:۔         نیو پرنٹ سینٹر،  دریا گنج،  نئی دہلی۔۲ تزئین:۔       امکان

علی سردار جعفری کے افسانے←

پروفیسر ابن کنول، صدر شعبہ اردو، دہلی یونی ورسٹی، دہلی۔ انڈیا۔

شمالی ہندوستان میں اردو زبان و ادب کے لیے گزشتہ تین صدیاں بہت اہمیت رکھتی ہیں۔ اٹھارہویں صدی میں مغلیہ سلطنت کی بنیادیں ہلنے لگی تھیں، لیکن اردو شاعری کے زرّیں دور کا آغاز ہوگیا تھا۔ انیسویں

اندر سبھا کا یہود-اردومخطوطہ←

پروفیسر ارشد مسعود ہاشمی، صدر شعبۂ اردو، جئے پرکاش یو نی ورسٹی، چھپرہ

          یہود- اردو :         31 جولائی 2007 ء کو ڈاکٹر نور سو برس خان نے برٹش لائبریری کی ویب سائٹ پہ اس کے مخطوطہ نمبر Or. 13287 کے حوالے سے ایک نوٹ پیش کیا تھا۔ اس

اکبر کی شاعری کی خصوصیات←

ڈاکٹر ناصرہ سلطانہ شعبئہ اردو دہلی یونیورسٹی

اکبر کا نام نامی اسم گرامی سید اکبر حسین اکبر تھا۔ ان کا تعلق یوپی کے معزز اور خوشحال خانوادے سے تھا۔ ان کے والد محترم کا نام سید تفضیل حسین تھا۔ اکبر ۱۶ نومبر ۱۸۴۶؁ء بہ

احمد فرازؔ کی شاعری میں محبوب کا تصور←

ڈاکٹرآفتاب عرشیؔ,سینٹرل یونیورسٹی حیدرآباد، انڈیا

مَیں اُس کو دیکھتا رہتا تھا حیرتوں سے فرازؔ یہ زندگی سے تعارف کی ابتدا تھی مری      احمدفرازؔ کی شاعری کا خمیر عشقِ مجازی سے ا ُٹھا ہے ، جو فرازؔ کے یہاں ایک قوت کے

انجمن پنجاب اور جدید اردو نظم کی تحریک←

ڈاکٹر محمد افضل،گیسٹ فیکلٹی (اردو )   شعبۂ اردو ،الہ اآباد یونیورسٹی ،الہ آباد

یہ ایک مسلمہ حقیقت ہے کہ جب معاشرہ تغیر و تبدل کی منزل سے گزرتا ہے تو اس سے متعلق انسانی ذہن بھی متاثر ہوئے بغیر نہیں رہ پاتااور جب انسانی ذہن و دماغ میں تبدیلیوں کا

عصمت چغتائی نسائی ادب اور  باغیانہ سماجی حقیقت پسندی کی علمبردار←

ڈاکٹر قمر الحسن, اسسٹنٹ پروفیسر، شعبئہ اردو ،ستیہ وتی کالج دہلی یونی ورسٹی

        بیسویں صدی میں عالمی سطح پراعلیٰ معیارکا ایسا ادب پیدا ہوا جونوآبادیاتی، محکومی، نسلی تفریق، سیاسی جبر، طبقاتی استحصال، جنسی نابرابری یا طبقہ نسواں کے ساتھ زبردستی، توہم پرستی یا تہذیبی امورمیں غیرعقلی

منشی پریم چند کے افسانوں میں سیاسی شعور←

ڈاکٹر تحسین بی بی, صدر شعبہ اُردو،  ویمن یونیورسٹی صوابی ، پاکستان

   Fiction & Short Story of Prem Chand not only reflects the political, cultural and social conflicts but alsoare a positive and best example for having a great step of reform and revolution. Either there is his

کلاسیکیت: تعریف، دائرۂ کار اور عصرِ نو کے تقاضے←

نازیہ امام، ریسرچ اسکالر، دہلی یونی ورسٹی، دہلی

زندگی اور کائنات کے تقریباََ تمام ہی شعبوں میں کلاسیکیت ، جدّت اور اس قبیل کی دوسری اصطلاحیں رائج ہیں۔ انھیں بالعموم مخالف رویّے کے طور پر بھی دیکھا جاتا ہے۔ کلاسیکیت اقدارِ قدیم میں یقین کرنے

تقسیم ہند ،عورت اور اردو فکشن←

محمد یٰسین گنائی، ریسرچ اسکالر، شعبہ اردو، پنجابی یونی ورسٹی

                انسان اشرف المخلوقات کی تاریخ میں روزِاول سے ہی مختلف واقعات وحادثات رونما ہوتے رہے ہیں اور یہ سفر تاحال مسلسل جاری ہے۔مسلم تاریخ میں حضرت آدم اور ہوا کا جنت سے زمین کا سفر ہو

اردو ادب کے دوراولین کی شاعرات←

سروری خاتون، ریسرچ اسکالر، جامعہ ملیہ اسلامیہ

          امیر خسرو اردو کے اولین بنیاد گذاروں میں سے ایک ہیں،جن کی گوناگوں صفات اور علمی خدمات کا زمانہ معترف ہے،امیر خسرو کے کلام میں اردو کے کچھ الفاظ ملتے ہیں جسے اردو کا نقش اول

مختلف اقوام ومذاہب میں عورت کی حیثیت←

سفینہ عرفات فاطمہ، ریسرچ اسکالر، مولاناآزادنیشنل اردویونیورسٹی، حیدرآباد

ہردورمیں مظلومی اورمحکومی عورت کا مقدررہی ہے ۔اس کے حصہ میں روشنی کبھی نہیںآئی ‘وہ اذیت اور ذلت کابوجھ اٹھائے تاریکیوںکے جنگلوں میں بھٹکتی رہی ہے۔(نور ِ اسلام سے قبل) کہیںصنفی امتیاز کے سبب اسے زندہ دفن

اردو مثنوی اور جدید شاعری←

 محمد یعقوب راتھر،  ریسرچ اسکالر ادارۂ اقبالیات برائے ثقافت و فلسفہ    کشمیر یونیورسٹی ،حضرت بل سری نگر۔۱۹۰۰۰۶

     ۱۸۵۷ کے انقلاب میں سیاسی طور پر شکست کھانے کے بعد قوم و ملت نفسیاتی طور پر الجھن کی شکار ہو گئی۔ مغربی اور مشرقی اقدار کے ٹکراؤ سے سیاسی، سماجی اور معاشی توازن بگڑنے

اردو زبان کے ارتقا میں سرکاری اداروں کا کردار:ایک جائزہ←

مدنی اشرف، ریسرچ اسکالر، شعبہ اردو، دہلی یونیورسٹی

        برٹش حکومت کے شروعاتی دورمیں سرکاری زبان کا درجہ فارسی زبان کو حاصل تھا۔کیوں کہ انگریزوں نے ہندوستانی سلطنت مغلیہ حکومت سے چھینی تھی اور مغلوں کی زبان چونکہ فارسی تھی اس لیے حکومتی کام کاج

کلام میر میں’سکندر‘جاہ وحشمت کا ایک استعارہ←

عبد الرحمن جمال الدین، ریسرچ اسکالر ، جامعہ ملیہ اسلامیہ ، نئی دہلی

سکندر یونان کا باشندہ تھا، باپ کی جانب سے ’کرنس‘ اور ماں کی طرف سے’ نوبطلیموس‘ کے توسط سے اس کا نسب ’ایقوس‘ تک پہنچتا ہے، اس کے باپ ’فلپس‘ کا زمانہ شباب ’ ساموتھریس‘ میں گذرا

خلیل الرحمن اعظمی:جدید غزل کا پیش رو←

فردوس احمد میر، اننت ناگ، کشمیر

               خلیل الرحمن اعظمی (۱۹۲۷ء ۔۱۹۷۸ئ)جدید غزل کے بنیاد گزاروں میں شمار کئے جاتے ہیں ۔انہوں نے جدید دور کے اضطراب کو اپنی غزلوں میں پیش کرکے شاعری میں داخلیت کے عناصر کو پھر سے اجاگر

ناول’’لیمی نیٹدگرل‘‘موضوع ا ور اسلوب کا ایک نیا باب←

امتیاز احمد علیمی،ریسرچ اسکالر،شعبہ اردو ،جامعہ ملیہ اسلامیہ،نئی دہلی

اکیسویں صدی کے ابتدائی عشرے اور دوسری دہائی کے نصف عشرے کی تخلیقات پر نظر ڈالنے کے بعد یہ کہا جا سکتا ہے کہ یہ صدی فکشن کی صدی ہے۔اس صدی کے موضوعات بیسویں صدی کے موضوعات

Please wait...

Subscribe to our newsletter

Want to be notified when our article is published? Enter your email address and name below to be the first to know.